سوات(زمونگ سوات ڈاٹ کام)عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی ایڈیشنل سیکر ٹری اور سابق صوبائی وزیر واجد علی خان نے کہا ہے کہ وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف نے جلسہ مینگورہ میں ملاکنڈ ڈویژن سے کسٹم ایکٹ کی واپسی کا اعلان نہ کرکے یہاں کے عوام کے جذبات کو ٹھیس پہنچایا ہے اِن خیالات کا اظہار اُنہوں نے امانکوٹ فیض آباد میں ورکرز کنونشن سے خطاب کر تے ہوئے کیا، اُنہوں نے کہا کہ وزیر اعظم کے جلسے سے یہاں کے عوام کے توقعات وابستہ تھے لیکن انہوں نے عوام کی خوشحالی کیلئے کچھ نہیں کیا اس طرح کے اعلانات پہلے بھی کئے جاچکے ہیں اور اب حکومت کے ہچکولے لینے والے وقت میں ان اعلانات سے کچھ نہیں ہوگا ،انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے پہلے سے کئے کاموں کے اعلانات کئے اور یہاں کے عوام کو دھوکہ دیکر واپس چلے گئے ،کہا کہ ہم نے اپنے دُور میں کئی چیلنجز کے باوجود رکارڈ ترقیاتی کام کئی ہیں ، جس مین ہم نے سوات کے لئے اہم میگا پراجکٹس منظور کرائے، ہم نے عوام سے اپنے درتی پر امن اور اپنے اختیار کے وعدے کر کے ووٹ لیا تھا جو ہم نے اپنے خون دے کر پورے کئے ، اُنہوں نے کہا کہ تبدیلی کے حکومت ہمارے دور کے منظور شدہ پراجکٹس پر اپنے تحتیاں لگوا کر افتتاح کر رہے ہیں اور سوات کے عوام کے لئے میگا پراجکٹس لانے کے بجائے کسٹم ایکٹ جیسا ڈرون اٹیک کر رہے ہیں، اُنہون نے کہا کہ دوبارہ اقتدار میںآکرنہ صرف ہمارے دور کے ادھو رے پراجکٹس مکمل کرینگے بلکہ نئے میگا پراجکٹس سوات کے لئے منظور کرائینگے، اِس موقع پرکمیٹی چیئرمین خواجہ محمد خان نے کہا کہ میں آپ لوگوں کے جزبہ اور اخلاص کو دیکھ کر یہ بات دعوے کے ساتھ کھ سکتا ہوں کہ اگلا دور پھر اے این پی کا ہوگا،تحریک انساف کے حکومت نے اِس صوبے کابیس سال پیچھے دھکیل دیاہے اور پختوں کے مینڈیٹ کا احترام نہیں کیا،اِس موقع پر دیگر قائدین خان سردار، عبدلعلی آشنا، تحصیل کونسلر اختر علی خان ،نثار خان ، گوہر علی پختونیار،عبیداللہ، مقام خان ، ظفر علی ناز اور دیگر نے بھی کنونشن سے خطاب کیا، اِس موقع پر سینکڑوں افراد نے تحریک انصاف اور مسلم لیگ سے مستعفی ہوکر عوامی نیشنل پارٹی میں شمولیت کا اعلان کر دیا جس کو واجد علی خان ، خواجہ محمدخان اور دیگر قائدین نے سُرخ ٹوپیاں پہنا دئے۔




ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
1056 مناظر