لاہور(زمونگ سوات آن لائن نیوز )نائیجیرین قومی حج کمیشن نے وفاقی وزارت مذہبی امور ومذہبی ہم آہنگی سے رابطہ کیا ہے اور اس سے درخواست کی ہے کہ اسے پاکستان کے حالیہ حج آپریشن میں پنجاب آئی ٹی بورڈ کے وضع کردہ حج مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم جیسا نظام تیار کرنے میں معاونت فراہم کی جائے۔ پی آئی ٹی بی کے حج نظام کو سعودی عرب اور پاکستان میں حجاج کرام کی بڑی تعداد نے بے حد سراہا تھا کیونکہ اس کی وجہ سے پاکستانی
عازمین حج کو فراہم کی جانے والی خدمات میں بہتری آئی ہے اور تاخیری حربوں کا خاتمہ ہوا ہے۔پی آئی ٹی بی کے اس نظام نے ہرمرحلے پر عازمینِ حج کو مکمل راہنمائی اور معاونت فراہم کی تھی۔حالیہ حج کے دوران آٹھ بینکوں کی7500شاخوں میں 15ہزار اہلکاروں اور افسروں نے اس نظام کے ذریعے دس روز میں عازمینِ حج کی رجسٹریشن اور45منٹ میں قرعہ اندازی کا کام مکمل کیا۔اس کام پر قبل ازیں تین ماہ لگ جاتے تھے۔اس
نظام نے امسال2لاکھ80ہزار617درخواستیں آن لائن وصول کیں اور ان میں سے 69ہزار534خوش نصیبوں کوقرعہ اندازی میں کامیاب قرار دیا گیا۔ یہ نظام پی آئی ٹی بی نے گذشتہ سال شروع کیا تھا جسے امسال مزید بہتر بنا دیا گیا ہے۔ پاکستانی حج سسٹم کی بدولت عازمینِ حج کے لئے فلائیٹ شیڈول اور عمارتوں کی تفویض کا کام دو دن میں مکمل کیا گیا۔نائیجیریا کے حج کمیشن کے ارکان نے حج کے موقع پرپاکستانی حج کمیشن کی کار
کردگی کوقریب سے دیکھا اور بے حد پسند کیا ۔ اس سے استفادہ کرنے کے لئے اب وفاقی وزارتِ مذہبی امور سے گہری دلچسپی کا اظہار بھی کیا ہے۔




ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
525 مناظر