سوات(زمونگ سوات ڈاٹ کام) سوات میں وزارت صنعت کے زیر اہتمام دوروزہ صنعتی نمائش کا اہتمام کیا گیا، مہمان خصوصی وفاقی وزیر برائے صنعت خرم دستیگر تھے جبکہ اس موقع پر دنیا کے 24مختلف مالک کے سفیروں نے بھی نمائش میں شرکت کی اور مقامی مصنوعات اور دیگر اشیاء کے اسٹالوں میں گہری دلچسپی لی،دوروزہ صنعتی نمائش کا اہتمام وفاقی وزارت صنعت نے کیا تھا ،جس کا مقصدسوات میں تیار ہونے والی مصنوعات کے ساتھ ساتھ یہاں پر پیدا ہونے والے پھلوں اور معدنیات سمیت دیگر اشیاء کی نمائش کے ساتھ ساتھ انہیں عالمی مارکیٹ تک پہنچانے کے لئے اقدامات اٹھا نا بھی تھا ،سیدوشریف کے مقامی ہوٹل میں منعقد ہ اس دو روزہ نمائش میں سوات میں ہنرمندوں کے ہاتھوں سے بننے والی دیدہ زیب اور خوش نما شالوں ،ملبوسات اور کپڑوں سمیت دستکاری ،کندہ کاری سے مزین فرنیچر ،زمرد سمیت دیگر قیمتی پتھر سے بنی چاندی اور تانبے کے زیورات ،پھلوں اور خشک میوہ جات کے اسٹالز لگائے گئے تھے ،ان اسٹالوں میں خواتین ہنرمندوں نے بھی اسٹال لگائے تھے جبکہ چترال کی کیلاش وادی کی خواتین نے بھی اسٹال لگایا گیا تھا ،وفاقی وزیر خرم دستیگر خان اور چو بیس ممالک کے سفیروں نے صنعتی نمائش میں لگے اسٹالوں میں گھل مل گئے اور سواتی مصنوعات میں گہری دلچسپی لی ،تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر برائے صنعت خرم دستگیر خان نے کہاکہ پاکستان اندھیروں سے نکل کر ترقی کے راستے پر گامزن ہے کیونکہ وزیر اعظم نوازشریف کا ایک ہی ایجنڈ اہے کہ پاکستان ہمیشہ ترقی کرے ،انہوں نے کہاکہ 24ممالک کے سفیروں کو نئی پاکستان آمد پر خوش آمدیدکہتاہوں سوات کی وادی کلچر،مہمان نوازی اور خوب صورت مقامات میں خودکفیل ہے اور میں فخر سے کہتاہوں کہ وادی سوات جیسی مہمان نواز ی پورے ملک میں مثال نہیں ملتی ،انہوں نے کہاکہ ہم نے عوام کے خواب چکناچور کرنے والے دہشت گردوں کے خواب چکنارچور کردیا ہے، حکومت اور پاک فوج نے دہشت گردوں کا قلع قمع کردیا ہے ،انہوں نے کہاکہ عالمی سطح پر ہونے والی تبدیلیوں میں پاکستان اپنا کردار ہر صورت اداکرنا ہوگا کیونکہ حکومت کو پاکستان کے مفادات کر مدنظر رکھ کر اقدامات اٹھانا ہوں گے ،انہوں نے کہاکہ خیبر پختونخوا حکومت کے مستقبل کا فیصلہ یہاں کے عوام کریگی لیکن وفاقی حکومت ،صوبائی حکومت کو ساتھ لیکر کام کرے گی ،انہوں نے سوات میں نہ صرف صنعتی سنٹر بنانے کا اعلان کیا بلکہ سوات میں ہر سال صنعتی نمائش منعقد کرنے کی بھی ہدایت کردی ،نمائش سے جی او سی سوات میجر جنرل آصف غفور نے بھی خطاب کیا اور کہاکہ پاکستان دہشت گردوں کا حامی ملک ہے کیونکہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں سب سے ذیادہ قربانیاں پاکستانی افواج اور عوام نے دی ہیں ،انہوں نے کہاکہ ہمارے ملک میں خواتین کے حقو ق کا سب سے ذیادہ خیال رکھا جاتا ہے یہی وجہ ہے کہ ایک خاتون ہمارے ملک کی چیف ایگزیکٹیو رہی ہیں جبکہ آج بھی ہماری پارلیمنٹ میں خواتین کا حصہ اور نمایاں کردار ہے ،انہوں نے کہاکہ سوات میں تین ماہ کے قلیل اور ریکارڈ آپریشن کے بعد اب یہاں کی صنعت کو پروان چڑھانے کے لئے اقدامات کئے جارہے ہیں انہوں نے سفیروں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وہ صرف اپنے ممالک کے نہیں ہمارے بھی سفیر ہیں اور ہم دنیا کو بتانا چاہتے ہیں کہ پاکستان امن کا داعی ہے اور دنیا میں امن چاہتا ہے ،اس موقع پر کمشنر ملاکنڈ ڈویژن عثمان گل او ردیگر مقررین نے بھی خطاب کیا تقریب کے اختتام پر وفاقی وزیر نے سفیروں اور دیگر میں تحائف اور شیلڈزبھی تقسیم کئے اسی طرح جی او سی سوات نے وفاقی وزیر کو بھی تحفہ پیش کیا ۔




ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
767 مناظر