نواز شریف اور آصف زرداری میں جھگڑا، سابق وزیراعظم کیا بات منوانا چاہتے تھے جس پرزرداری نے صاف انکار کر دیا




اسلام آباد(زمونگ سوات ڈاٹ کام)نجی ٹی وی کیپیٹل ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے معروف صحافی و تجزیہ کار حامد میر نے انکشاف کرتے ہوئے کہا ہے کہ نواز شریف جب وزیراعظم تھے تو راحیل شریف کے دور میں انہوں نے راحیل شریف کے خوف سے آصف زرداری سے ملاقات نہیں کی جبکہ اب آصف زرداری بھی نواز شریف سے ہاتھ نہیں ملارہے اور ملاقات کرنےسے انکاری ہیں۔ آصف زرداری کی ناراضگی پرویز مشرف کے ٹرائل، ایان علی، ڈاکٹر عاصم جیسے معاملوں کی وجہ سے ہے۔ حامد میر کا کہنا تھا کہ آصف زرداری نے نواز شریف کے کہنے پر ان سے پرویز مشرف کے ٹرائل کے حوالے سے ملاقات کی ، آصف زرداری سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق پرویز مشرف کا ٹرائل چاہتے تھےجبکہ نواز شریف نے ان سے ملاقات کے بعد راحیل شریف سے ایک خفیہ این آر او کیا اور عدلیہ کا نام استعمال ہوا اور پرویز مشرف باہر چلے گئے اور اس کے بعد پھر ایان علی کا معاملہ ہوا اور ن لیگ کے لوگ ایان علی کا نام لے کر آصف زرداری کو بدنام کرتے رہے ۔ پرویز مشرف کے ملک سے باہر جاتے ڈاکٹر عاصم کا بھی معاملہ ہو گیا ۔حامد میر کا کہنا تھا کہ میرے سے گزشتہ دن بھی یہی سوال پوچھا گیا جس پر میں نے آصف علی زرداری کا حوالہ دیا تھا۔ مجھ سے پوچھا گیا تھا کہ نواز شریف آصف علی زرداری سے تعلقات بحال کرنے کیلئے کیوں اتنے متمنی ہیں اور آصف زرداری کیوں ان سے ہاتھ نہیں ملا رہے تو میں نے اس سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا تھا کہ آصف علی زرداری کو خدشہ ہے کہ نواز شریف اپنی پارٹی کی حکومت کے ذریعے 1999والا کام نہ کروا دیں۔




ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
19 مناظر