کبل ، مقامی کاشتکاران آل سوات کا کبل میں احتجاجی مظاہرہ




کبل (زمونگ سوات ڈاٹ کام ) مقامی کاشتکاران آل سوات کا کبل میں احتجاجی مظاہرہ منگل کے روز سے مینگورہ میں دھرنا دینے کا اعلان ۔ آل سوات مقامی کاشتکاران نے مورثی اراضیات محکمہ جنگلات کے نام کاغذاتی مال درج ہونے کے خلاف نشاط چوک مینگورہ میں احتجاجی دھرنا دینے کا اعلان کیا۔ وزیر اعلٰی، گورنر ہاؤس، ضلعی ناظم، ممبران اسمبلی سے نا اُمیدی کا اظہار کرتے ہوئے آئندہ منگل سے مینگورہ نشاط چوک میں با قاعدہ دھرنا کیمپ لگانے کا اعلان کیا جبکہ اپنے مطالبا ت کے حل کے لئے احتجاجی مظاہرے میں آل سوات مقامی کاشتکاران کے صدر مولانا منصور علی ، ماسٹر خان زمان ، امیر زمان، گل رحمان، گل حسین، نادرشاہ و دیگر درجنوں افراد نے شرکت کی۔ احتجاج کرنے والوں نے موقف اختیار کیا ہے کہ ہم ضلع سوات کے اصل اور قدیم رہائشی باشندہ گان ہیں۔ آباو اجداد کے زمانے سے ضلع سوات میں مستقل طور پر رہائش پذیر ہیں اور پورے ضلع سوات میں پہاڑی مقامات کے مختلف تحصیلوں سے تعلق رکھتے ہیں جہاں پر ہماری پدری اور مورثی اور زر خریداراضیات ہیں جن کو ہم باپ دادا کے سامنے سے کاشت کرتے چلے آرہے ہیں۔ ان اراضیات پر رہائشی مکانات، مساجد اور قبرستان کے علاوہ کھیت بھی ان اراضیات میں شامل ہیں۔ ضلع سوات کے مختلف اراضیات کے زر خرید اور مورثی مالکان ہیں جن کا اندراج غلط طریقے سے محکمہ جنگلات کے نام کاغذاتی مال میں درج کیا گیا ہے۔ لہٰذا صوبائی حکومت سے یہ استدعا ہے کہ وہ ہمیں باقاعدہ طور پر واپس کردے۔ انہوں نے باقاعدہ طور پر اعلان کیا اور کہا کہ آئندہ منگل کو ڈی ایف او ، ڈیمارکیشن دفتر کے سامنے جمع ہوکر احتجاج شروع کرکے دھرنا دیں گے۔ جو کہ ہمارے مطالبات کے حل تک جاری رہے گا۔



ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
28 مناظر