سوات (زمونگ سوات ڈاٹ کام) مسمی شاہ دوران ولد سیفو رسکنہ مزید خیل منگلورتھانہ خوازہ خیلہ آکر رپوٹ درج کرواتے ہوئے کہاکہ میں منگلور سے خوازہ خیلہ آیا تھا واپسی پر خوازہ خیلہ بازار میں ایک سفید رنگ کے موٹر کار جس میں دو افراد موجود تھے میرے نزدیک آکر جانے کو کہا ، ڈرائیور نے مجھے پچھلے سیٹ میں دوسرے شخص کے ساتھ بیٹھنے کو کہا بانڈئ کے مقام پر ڈرائیور اور ساتھی نے مجھ سے زبردستی کرتے ہوئے میرے بنیان کے جیب سے 72000روپے نقد رقم اور 4تولے سونا لے کر مجھے گاڑی سے دھکیل کرمینگورہ کے جانب فرار ہوگئے۔ واقع کا فوری نوٹس لیتے ہوئے ضلعی پولیس سربراہ کیپٹن (ر)واحد محمود نے ڈی ایس پی خوازہ خیلہ بادشاہ حضرت خان کی سربراہی میں ایس ایچ اُو خوازہ خیلہ اور انوسٹی گیشن آفیسر پر مشتمل تفتیشی ٹیم تشکیل دیتے ہوئے جلد از جلد ملزمان کی گرفتاری لوٹی گئی نقد رقم اور سونے کی برآمدگی کا ہدف دیا۔ تفتیشی ٹیم نے بروقت کاروائی کرتے ہوئے CCTVکیمروں کے فوٹیج کے ذریعے واردات میں شامل گاڑی کی انفارمیشن حاصل کرتے ہوئے لنڈاکے چیک پوسٹ کواطلاع دی۔ لنڈاکے چیک پوسٹ پر ڈی ایس پی بریکوٹ سیدزمان شاہ کے نگرانی میں لنڈاکے چیک پوسٹ انچارج اے ایس آئی کلیم خان نے پولیس آپریشن ٹیم کے ہمراہ کروائی کرتے ہوئے موٹر کار نمبرLWQ-0270میں سوارزین اللہ ولد سید قمر سکنہ لغمان افغانستان حال مردان اور انعام بادشاہ ولد حسن بادشاہ شناختی کارڈ نمبر16102-2288973-9سکنہ مانکی خیل پاسماتحصیل تخت بھائی ضلع مردان کو گرفتار کرتے ہوئے مال مسروقہ72000نقد رقم اور چار تولے سونا برآمد کرکے ملزمان کو گرفتار کیا،مزید تفتیش جاری ۔ضلعی پولیس سربراہ کیپٹن(ر)واحدمحمودنے پولیس کی بروقت کاروائی کو سراہتے ہوئے پولیس ٹیم کو نقد انعام سے نوازا اور جوانوں کو عوام الناس کے جان ومال کے تحفظ کے لیے اپنی تمام وسائل بروئے کار لانے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ غریب عوام کی دعائیں اور مظلوم کو بروقت انصاف کی فراہمی ہی معاشرئے کی بقا کا ضامن ہے۔




ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
25 مناظر