کیس پانامہ پر تھا اور سپریم کورٹ نے اقامہ پر۔۔ عمران خان نے بھی نواز شریف کے موقف کی تائید کر دی




اسلام آباد(زمونگ سوات ڈاٹ کام)نواز شریف کے بعد عمران خان بھی عدلیہ پر چڑھ دوڑے، کیس پانامہ پر تھا اقامہ پر کمزور فیصلہ دیکر نواز شریف کو فائدہ پہنچایا گیا، عمران خان کی نجی ٹی وی دنیا نیوز کے اینکر معید پیرزادہ کو انٹرویو میں اظہار خیال۔ تفصیلات کے مطابق نواز شریف کے عمران خان نے بھی عدلیہ پر تنقید کے نشتر چلا دئیے ہیں۔ نجی ٹی وی دنیا نیوز کےاینکر معید پیرزادہ کو انٹرویودیتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ نواز شریف کے خلاف کیس پانامہ پر تھا جبکہ پانامہ کیس پر اقامہ پرکمزور فیصلہ دیا گیا جس کا نواز شریف کو فائدہ پہنچا۔ واضح رہے کہ اس سے قبل عمران خان پانامہ کیس فیصلے کو خوش آئند اور کرپشن کے خلاف اہم قدم قرار دیتے رہے ہیں۔ چیئرمین تحریک انصاف کی جانب سے پہلی بار پانامہ کیس فیصلے کے بعد عدلیہ پر تنقید سامنے آئی ہے ۔ سیاسی حلقوں کا کہنا ہے کہ نواز شریف کے بیانئے کی بڑھتی مقبولیت نے عمران خان کو پانامہ کیس فیصلے پر غور کرنے پر مجبور کیا ہے جس کے بعد انہوں نے اس فیصلے کو نواز شریف کی طرح ہی اقامہ فیصلہ قرار دیتے ہوئے کمزور فیصلہ قرار دیا ہے۔ عمران خان کا تفصیلی انٹرویو آج نجی ٹی وی دنیا نیوز پر نشر کیا جائے گا۔واضح رہے کہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے اپنی شادی کے بعد آج تمام سیاسی سرگرمیاں منسوخ کر رکھی ہیں جبکہ ان کا یہ انٹرویو ایک روز قبل کیا گیا تھا۔ عمران خان کل کے روز دوبارہ سے اپنی سیاسی سرگرمیوں کا آغاز کر یں گے۔ اس وقت وہ اپنی دلہن بشریٰ بی بی کے ہمراہ بنی گالہ میں موجود ہیں۔خیال رہے کہ نواز شریف اور مریم نواز کے پے درپے جلسوں اور ان جلسوں میں عدلیہ پر تنقید نے سیاسی درجہ حرارت کو بام عروج پر پہنچا دیا ہے جبکہ ان جلسوں کو ن لیگ اپنی عدل تحریک کے ساتھ آئندہ عام انتخابات کی انتخابی مہم کا حصہ بھی قرار دے رہی ہے، گزشتہ روز نواز شریف اور مریم نواز نے شیخوپورہ میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے ایک بار پھر عدلیہ پر تنقید کرتے ہوئے پانامہ فیصلے کو عوامی عدالت سے مسترد ہونے کا کہا تھا۔




ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
45 مناظر