سیدوگروپ آف ٹیچنگ ہسپٹلز کے اپریشن تھیٹر کے ڈاکٹر جلاد بن گئے




مینگورہ(زمونگ سوات ڈاٹ کام)سیدوگروپ آف ٹیچنگ ہسپٹلز کے اپریشن تھیٹر کے ڈاکٹر جلاد بن گئے ،سٹریچرکو لات مار کر مریض کو نیچے گرادیا،رشتہ دار مریض کو پشاور لے گئے جہاں پر اس نے دم توڑ دیا ،رشتہ دار وتیماردار سراپا احتجاج بن گئے ،فوری تحقیقات کا مطالبہ کردیا ،اس حوالے سے فتح پور سے تعلق رکھنے والے رسول خان ،سبحان علی جو فوت ہونے والے شخص روزی خان کے بیٹے ہیں اور دیگر رشتہ داروں نے میت کو سوات پریس کلب کے سامنے لاکر وہاں پر احتجاجی مظاہرہ کیا ،اس موقع پر ان کا کہناتھا کہ گذشتہ روز وہ روزی خان کو تکلیف کی حالت میں کیجولٹی لائے جہاں سے انہیں اپریشن تھیٹر منتقل کردیا گیا ،انہوں نے کہاکہ ان کے معمر والد سٹریچر پر پڑے تھے کہ اس دوران بجلی چلی گئی ہم نے ڈاکٹر سے اپیل کی کہ جنریٹر لگادے تو اس نے طیش میں آکر سٹریچر کولات ماری جس کی وجہ سے مریض زمین پر گر کر زخمی ہوا تاہم ہم انہیں اٹھا کر پشاور لے گئے جہاں پر وہ فوت ہوگئے ،انہوں نے کہاکہ ہم رپورٹ درج کرانے کیلئے پولیس اسٹیشن گئے تو وہاں پر ہماری رپورٹ نہیں لی گئی بلکہ الٹا ہمارے خلاف رپورٹ درج کی جاچکی تھی،انہوں نے کہاکہ ڈاکٹر دکھی کی انسانیت کی خدمت کیلئے ہوتے ہیں مگر یہاں پرتو انسانیت کی تذلیل کی جارہی ہے ،لوگ اپنے مریضوں کو علاج معالجہ کی غرض سے ہسپتال لے جارہے ہیں جہاں پر انہیں کسی قسم کی توجہ نہیں دی جاتی ، آخر ہمارے ساتھ یہ ظلم کیوں کیا گیا ؟انہوں نے اعلیٰ حکام سے اس سلسلے میں فوری تحقیقات کرانے اور انصاف کی فراہمی کا مطالبہ کیا ۔



ایک تبصرہ شامل کریں…
0 Likes
171 مناظر